Aisa Kabhi Na Ho-Urdu Poetry

Aisa Kabhi Na Ho-Urdu Poetry


~ از waqas1290 پر ستمبر 29, 2010.

2 Responses to “Aisa Kabhi Na Ho-Urdu Poetry”

  1. this is the nice poetry.and its image is so nice very beautiful poetry.

  2. its the beautiful ghazal and so nice.

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

 
%d bloggers like this: